تازہ ترین
سرحد پر تارکین وطن کو روکنا امریکی اقدار نہیں،ملالہ یوسفزئی

سرحد پر تارکین وطن کو روکنا امریکی اقدار نہیں،ملالہ یوسفزئی

ویب ڈیسک ( 09جنوری ،2019) نوبل امن انعام یافتہ پاکستانی لڑکی ملالہ ہوسفزئی نے کہاہے کہ سرحد پر تارکین وطن کو روکنا امریکی اقدار نہیں،جبکہ ان کے والد ضیادین نے کہا وہ شروع سے ہی خواتین کو حقوق دینے کے حامی تھے۔

امریکی ٹی وی کو دیے گئے انٹریو میں ملالہ یوسفزئی نے کہاوہ امید کرتی ہیں کہ امریکی صدر اپنی پالیسی پر نظرثانی کریں گے اور تارکین وطن کو امریکا میں خوش آمدید کریں گے۔

ملالہ نے اپنی نئی کتاب کا ذکر کیا اور کہاکہ تارکین وطن سے متعلق نئی کتاب مارکیٹ میں آچکی ہے اورہ امید کرتی ہیں کہ ڈونلڈ ٹرمپ اور دیگر سیاستدان اسے پڑھیں گےاور تارکین وطن سے متعلق جانیں گے۔ایک سوال پر انہوں نے اپنی کتاب میں ترک وطن کرکے آنے والی پندرہ سال کی لڑکی اینا لیزا کی کہانی لکھی ہے اور وہ کس طرح بھائی سے ملنے ایک امید باندھ کر امریکی سرحد پر پہنچتی ہےلیکن ڈونلڈ ٹرمپ کی تارکین وطن کےخلاف پالیسی نے ان کے خواب مٹی میں ملادئے۔

ملالہ نے خود کو بھی ترک وطن قرار دیا اور کہاکہ وہ بھی دیگر لڑکیوں کی طرح پناہ گزیں ہیں۔ایک اور انٹرویو میں ملالہ کے والد ضیا دین نے کہاکہ وہ چاہتے کہ دنیا کی تمام خواتین کو حقوق ملیں۔

Comments are closed.

Scroll To Top