تازہ ترین
سابق وزیر خوراک بلوچستان میر اظہار کھوسہ کی درخواست ضمانت منظور

سابق وزیر خوراک بلوچستان میر اظہار کھوسہ کی درخواست ضمانت منظور

کوئٹہ: (13 مارچ 2018) سابق وزیر خوراک بلوچستان میر اظہار کھوسہ کی درخواست ضمانت منظور کرلی گئی ہے۔

بلوچستان ہائیکورٹ نے سابق صوبائی وزیر خوراک میر اظہار کھوسہ کی درخواست ضمانت 5 لاکھ روپے کے مچلکوں کے عوض منظور کرتے ہوئے اظہار کھوسہ کی رہائی کا حکم دے دیا ہے۔

میر اظہار حسین کا 14 روزہ ریمانڈ منظور

اس سے قبل 07 فروری 2018 کو سابق صوبائی وزیر خوراک بلوچستان اور مسلم لیگ (ن) کے رکن صوبائی اسمبلی میر اظہار حسین کھوسہ کو احتساب عدالت نے چودہ روزہ ریمانڈ پر نیب کے حوالے کیا۔

گندم خورد برد کیس میں رکن بلوچستان اسمبلی کو احتساب عدالت میں نیب کی جانب سے پیش کیا گیا۔ سماعت کے دوران نیب کی جانب سے ملزم کے ریمانڈ کی استدعا کی گئی۔ عدالت نے انکوائری مکمل نہ ہونے پر نیب کے تفتیشی افسر پر برہمی کا اظہار کیا، جج نے تفتیشی افسر کو کہا کہ آپ کو انکوائری کے بعد ریفرنس دائر کرنا چاہیے تھا۔تفتیشی افیسر نے عدالت کوا نکوائری رپورٹ آئندہ سماعت پر پیش کرنے کی یقینی دہانی کرائی جس کے بعد احتساب عدالت نے میر اظہار حسین کھوسہ کو چودہ روز ریمانڈ پر نیب کے حوالے کردیا اور حکم دیا کہ ملزم سے ان کے بچوں کی ملاقات کرائی جائے۔

بلوچستان رکن اسمبلی میر اظہار حسین کھوسہ گرفتار

یاد رہے کہ 06 فروری 2018 کو نیب بلوچستان نے کرپشن الزامات میں ایم پی اے میر اظہار حسین کھوسہ کو گرفتار کیا۔

ذرائع کے مطابق قومی احتساب بیورو بلوچستان نے محکمہ خوراک میں اربوں روپے کی کرپشن کے کیس میں اہم پیش رفت کرتے ہوئے موجودہ ایم پی اے اور سابق وزیر خوراک بلوچستان میر اظہار حسین کھوسہ کو گرفتار کرلیا۔

یہ ویڈیو دیکھنے کیلئے پلے کا بٹن دبائیے

نیب کے مطابق سابق وزیر خوراک نے محکمے کی سفارشات کے برخلاف بُری ساکھ کے حامل گریڈ چھ کے منظورِ نظر ملاز م کو انچارج پی آر سی سینٹر سریاب تعینات کروایا، اس دوران وزیر خوراک کی آشیرباد سے 65 ہزار گندم کی بوریاں غبن کر کے قومی خزانے کو تقریبا 28 کروڑ کا نقصان پہنچایا گیا۔

یہ بھی پڑھیے

سابق صوبائی وزیر میر اظہار حسین کا 14 روزہ ریمانڈ منظور

کرپشن الزامات: بلوچستان رکن اسمبلی میر اظہار حسین کھوسہ گرفتار

 

Comments are closed.

Scroll To Top