تازہ ترین
جوڈیشل ایکٹوازم کی بنیاد انسانیت کی بہتری کیلئے رکھی، چیف جسٹس

جوڈیشل ایکٹوازم کی بنیاد انسانیت کی بہتری کیلئے رکھی، چیف جسٹس

لاہور (12جنوری ، 2019)چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار نے کہا ہے کہ جوڈیشل ایکٹوازم کی بنیاد انسانیت کی بہتری کیلئے رکھی،کسی کے کام میں مداخلت نہیں کی،سختی کسی کی تذلیل کیلئے نہیں قانون کی حکمرانی کیلئے کی،14جنوری کو پولیس ریفارمز کا تحفہ دیں گے۔

لاہور ہائیکورٹ میں الوداعی تقریب سے خطاب میں چیف جسٹس ثاقب نثار نے کہا کہ میری لاہور ہائیکورٹ کے ساتھ وابستگی 56 سال سے ہے،اب عوام کو وہ انصاف نہیں مل رہا جو پہلے ملا کرتا تھا۔

ویڈیودیکھنے کےلیے پلے کابٹن دبائیں

چیف جسٹس نے کہا کہ نعمتوں میں پاکستان کو پہلے نمبر پر شمار کرتا ہوں،کھلی کچہری کےدوران ایسے سائلین کو بھی دیکھا جن کے پاس دواخریدنے کی بھی ہمت نہیں تھی۔

چیف جسٹس آف پاکستان نے کہا کہ ان سےکئی غلطیاں ہوئیں، لیکن ان میں بدنیتی نہیں تھی۔

جسٹس ثاقب نثار نے کہا کہ سپریم جوڈیشل کونسل میں صرف دو ریفرنسز زیر التوا ہیں،ہم اہلیت پر فیصلے کریں گے،ججوں کو بلیک میل نہیں ہونے دیں گے۔

چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ جج صاحبان نوکری سمجھ کرنہیں،خدمت سمجھ کرکام کریں۔

Comments are closed.

Scroll To Top