تازہ ترین
تھر پارکر میں غذائی قلت کے باعث مزید 3 بچے دم توڑ گئے

تھر پارکر میں غذائی قلت کے باعث مزید 3 بچے دم توڑ گئے

تھر پارکر:(06 اکتوبر 2018) صحرائے تھر میں غذائی قلت کے باعث ننھے بچوں کی اموات کا سلسلہ جاری ہے۔ تھرپار کر میں غذائی قلت کے باعث مزید تین بچے دم توڑ گئے ہیں۔

محکمہ صحت سندھ کے مطابق سول اسپتال مٹھی میں غذائی قلت کے باعث تین بچے موت کے منہ میں چلے گئے ہیں۔

رپورٹس کے مطابق تھرپارکر میں رواں ماہ کے دوران اب تک سات بچے زندگی کی بازی ہار چکے ہیں جبکہ رواں سال کے دوران غذائی قلت اور قحط کے باعظ اموات کی تعداد چار سو تراسی تک پہنچ گئی ہے۔

صوبائی محکمہ صحت کے مطابق تھرپارکر میں سالانہ پندرہ سو بچوں کو غذائیت کی کمی اور علاقے میں مناسب طبی سہولیات نہ ہونے کے باعث مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

اپریل میں جاری ہونے والے ایک رپورٹ میں اقوام متحدہ کے بچوں کی فاؤنڈیشن نے ایک بیان میں کہا ہے کہ پاکستان میں ماہانہ بائیس بچے پیدائش کے بعد سے ایک مہینے کی عمر میں پہنچنے تک جان کی بازی ہار جاتے ہیں۔ جس کے بعد پاکستان ایسے ممالک میں شامل ہو گیا ہے جہاں اس وقت بچوں کی موت کی شرح زیادہ ہے۔

یہ بھی پڑھیے

تھرپارکر میں غذائی قلت، 2 بچے دم توڑ گئے

تھرپارکر میں بچوں کی اموات، چیف جسٹس نے تحقیقاتی کمیشن بنا دیا

Spread the love

Comments are closed.

Scroll To Top