تازہ ترین
تحریک انصاف کے نامزد صدارتی امیدوار عارف علوی کی سیاسی زندگی پر ایک نظر

تحریک انصاف کے نامزد صدارتی امیدوار عارف علوی کی سیاسی زندگی پر ایک نظر

ویب ڈیسک:( 27 اگست 2018) صدرمملکت کے عہدے کے لیے ایک بار پھر صوبہ سندھ سے نامزدگی کردی گئی ہے۔ وزیراعظم عمران خان نے پاکستان تحریک انصاف کے مرکزی رہنما ڈاکٹر عارف کی بطور صدارتی امیدوارمنظوری دے دی ہے۔

پی ٹی آئی کے صدارتی امیدوار اور سینئر رہنما پی ٹی آئی ڈاکٹر عارف علوی انتیس جولائی انیس سوانچاس کو پیدا ہوئے۔ پیشے کے اعتبارسے ڈینٹسٹ ہیں، اور پاکستان ڈینٹل کونسل اورایشیا پیسیفک ڈینٹل فیڈریشن کے صدررہے۔

ڈاکٹرعارف علوی کا شمار تحریک انصاف کے بانی ممبران میں ہوتا ہے۔ انہوں نے صوبائی اسمبلی سندھ کاپہلاالیکشن انیس سوستانوے میں مسلم لیگ ن کے سلیم ضیاء کے خلاف لڑااوربائیس سوووٹ سے الیکشن ہارگئے۔

ڈاکٹر عارف علوی نے دوہزاردو میں صندھ اسمبلی کے حلقے پی ایس نوے سے دوبارہ الیکشن لڑا اورصرف بارہ سو چھہترووٹ لے کرمتحدہ مجلس عمل کے عمر صدیق سے الیکشن ہارگئے۔

دوہزارسولہ میں عارف علوی کوتحریک صوبہ سندھ کا صدربنا دیا گیا۔ جبکہ ڈاکٹرعارف علوی دوہزارچھ سے دوہزارتیرہ تک تحریک انصاف کے مرکزی سیکرٹری جنرل بھی رہے ہیں۔ لیکن دوہزارتیرہ میں الیکٹیبلز کی آمد کے بعدانہیں اپنے عہدے سے ہاتھ دھوناپڑا۔

دوہزارتیرہ کے انتخابات میں انہوں نے کراچی کے حلقہ این دوسو پچاس سے ایم کیوایم کی امیدوار خوش بخت شجاعت کوشکست دی اور ستترہزارچھ سو انسٹھ ووٹ لے کرسندھ  سے پی ٹی آئی کے اکلوتے ایم این اے بن گئے۔

دوہزاراٹھارہ کے عام انتخابات میں ڈاکٹرعارف علوی کراچی کے حلقہ این اے دوسو سنتالیس سے تحریک انصاف کے ٹکٹ پرممبرقومی اسمبلی منتخب ہوئے۔ انہوں نے ایم کیوایم پاکستان کے ڈاکٹرفاروق ستاراورایم ایم اے کے محمد حسین محنتی کو شکست دی۔

عارف علوی پی ٹی آئی کے متحرک رہنماء ہیں، وہ ممنون حسین کےشہر کراچی سے تعلق رکھتے ہیں، وہ اپنی نامزدگی پرعمران خان کے ممنون ہونے کے باوجودممنون حسین ثابت نہیں ہوں گے اوراپنے مزاج کے مطابق حکومتی ایوانوں میں اپنی حاضری یقینی بناتے رہیں گے۔

یہ بھی پڑھیے

پیپلز پارٹی کے نامزد صدارتی امیداوار اعتزاز احسن کے سیاسی سفر پر ایک نظر

اسپیکر بلوچستان اسمبلی عبدالقدوس بزنجو کے سیاسی پس منظر پر ایک نظر

Spread the love

Comments are closed.

Scroll To Top