تازہ ترین
امریکہ ابھی تک پاکستان کے ساتھ ملکر کام کر رہا ہے، امریکی وزیر دفاع

امریکہ ابھی تک پاکستان کے ساتھ ملکر کام کر رہا ہے، امریکی وزیر دفاع

واشنگٹن (07 جنوری 2018) امریکی وزیر دفاع جیمز میٹس نے کہا ہے کہ امریکہ سیکیورٹی سے متعلق امداد روکنے کے بعد بھی افغانستان میں جنگ کے لئے ضروری فوجی سامان کے روٹ میں تعاون کے لئے ابھی تک پاکستان کے ساتھ کام کر رہا ہے اور پاکستان پر عسکری امداد کی پابندی کے باوجود پینٹاگون پاکستان کی اعلیٰ فوجی قیادت خصوصاً چیف آف آرمی اسٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ سے رابطے بحال کررہا ہے۔

واشنگٹن میں محکمہ دفاع میں ایک نیوز بریفنگ میں جیمز میٹس نے کہا کہ امریکہ ابھی تک پاکستان کے ساتھ کام کر رہا ہے اور اگر اس نے دہشتگردوں کے خلاف کارروائی کی تو وہ امداد بھی بحال کرے گا۔ جنرل میٹس نے کہا کہ میرا خیال ہے کہ گزشتہ روز امریکی سنٹرل کمان کے سربراہ جنرل جوزف وٹل نے جنرل قمر جاوید باجوہ سے فون پر گفتگو کی اور ہم مزید رابطے کی فضا بحال کریں گے۔

ویڈیو دیکھنے کیلئے پلے کا بٹن دبائیں

اس وقت امریکہ فوجی سامان کی فراہمی کے لئے پاکستان سے افغانستان کو اناج اور سامان فراہم کرتا ہے۔ ٹرمپ انتظامیہ پاکستان کی عسکری امداد پر پابندی عائد کرنے سے قبل ان تمام اہم امکانات کا ہر زاویے سے جائزہ لیا تھا لہٰذا امریکا کو ردِ عمل کے طور پر افغانستان میں سپلائی روکنے کی فکر نہیں ہے۔ ایک سوال کے جواب میں ان کا کہنا تھا مجھے نہیں لگتا اور نہ ہی میرے پاس ایسے کوئی اشارے ہیں جس سے ثابت ہو کہ اسلام آباد افغانستان کی سپلائی روکے گا۔

جب ان سے سوال کیا گیا کہ کیا امریکی پابندی کے بعد چین پاکستان کی عسکری امداد کو پورا کرے گا؟ تو انہوں نے جواب دیا ’نہیں‘۔ واضح رہے کہ پاکستان نے تمام دہشتگردوں کے خلاف کارروائی نہ کرنے سے متعلق امریکی الزامات اور گزشتہ 15 سال میں پاکستان کو 33 ارب ڈالر کی سیکیورٹی امداد فراہم کرنے کے امریکی دعویٰ کو بھی مسترد کیا ہے۔

دفتر خارجہ نے کہا کہ اس نے اپنے امن اور سلامتی اور علاقائی اور عالمی امن کے لئے وسیع پیمانے پر اپنے وسائل کے ذریعہ دہشتگردی کے خلاف دنیا کی سب سے بڑی جنگ لڑی ہے۔

یہ بھی پڑھیئے

امریکہ حقانی نیٹ ورک کے گرفتار کارندے تک رسائی نہ دینے پر پاکستان سے ناراض

امریکہ کی اقوام متحدہ میں شکست کے بعد اس کے بجٹ میں 285 ملین ڈالر کی کٹوتی

Spread the love

Comments are closed.

Scroll To Top