تازہ ترین
امریکا اور اسرائیل کی مشترکہ فوجی مشقتیں

امریکا اور اسرائیل کی مشترکہ فوجی مشقتیں

مقبوضہ بیت المقدس (12 مارچ 2018) امریکا اور اسرائیل کی مشترکہ فوجی مشقیں دوسرے ہفتے میں بھی جاری ہیں۔ دونوں ملکوں نے یہ مشقیں رواں ماہ کے آخر تک جاری رکھنے کا اعلان کیا ہے۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق اسرائیلی فوج کی طرف سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ تازہ ٹریننگ کا مقصد ریزرو فوج میں بھرتی کے لیے رابطوں میں تیزی لانا اور غزہ کی سرحد کے قریب موجود فوجی تنصیبات کے دفاع اور فوج کی نقل و حرکت کو زیادہ فعال بنانا ہے۔Image result for United States and Israel joint military exercisesجنگی مشقوں میں پیادہ فورس، بری فوج اور جنوبی ریجن کی فوج کی طرف سے لاجسٹک سہولت فراہم کی گئی ہے۔ مقامی میڈیا نے بتایا کہ امریکی فوج اسرائیل میں میزائل ڈیفنس فورس کی تنصیبات کو وسعت دینے کے لیے اسرائیلی فوج کے ساتھ تعاون کر رہی ہے۔Image result for United States and Israel joint military exercisesتازہ تربیت پروگرام امریکا اور اسرائیل کے مشترکہ جنگی مشقوں کے پروگرام کے شیڈول کا حصہ ہے۔ امریکی اور اسرائیلی فوج کی یہ مشقیں شمالی اور جنوبی فلسطین کے متوازی علاقوں میں وسیع پیمانے پر جاری ہیں۔

ان مشقوں میں 2500 امریکی اور 2000 اسرائیلی فوجی حصہ لے رہے ہیں۔ مشقوں کے دوران ایرو فضائی دفاعی نظام، آئرن ڈوم، ڈیوڈ سلائیشوٹ اور پیٹریاٹ میزائلوں کے تجربات کیے جا رہے ہیں۔

یہ بھی پڑھیے

عالمی یوم خواتین کے موقع پر امریکا برطانیہ اور دیگر ممالک میں ملین مارچ

اعزاز چوہدری ریٹائر، علی جہانگیر صدیقی امریکا میں پاکستان کے سفیر تعینات

Spread the love

Comments are closed.

Scroll To Top