تازہ ترین
الیکشن کمیشن نے ضمنی انتخابات کیلئے ضابطہ اخلاق جاری کردیا

الیکشن کمیشن نے ضمنی انتخابات کیلئے ضابطہ اخلاق جاری کردیا

اسلام آباد: (29 اگست 2018) الیکشن کمیشن نے ضمنی انتخابات کیلئے ضابطہ اخلاق جاری کردیا ہے۔ 61 نکات پر مشتمل انتخابی ضابطہ اخلاق سیاسی جماعتوں، امیدواروں، الیکشن ایجنٹ اورپولنگ ایجنٹ سے متعلق اصول و ضوابط پر مشتمل ہے۔

وزرائے اعلی اور وفاقی وصوبائی وزرا کے انتخابی حلقوں کے دورے پرپابندی عائد کر دی گئی ہے۔ ضابطہ اخلاق  کے مطابق صدرپاکستان، وزیراعظم، گورنرز اور رکن قومی و صوبائی اسمبلی متعلقہ حلقے کے دورے پر نہیں جاسکیں گے۔

یہ ویڈیو دیکھنے کیلئے پلے کا بٹن دبائیے

اس کے علاوہ قومی اور صوبائی اسمبلی کے اسپیکر، ڈپٹی اسپیکرز اور چئیرمین وڈپٹی چئیرمین سینیٹ پر بھی حلقوں کے دورے سے متعلق پابندی عائد کردی گئی ہے۔

ضابطہ اخلاق میں کہا گیا ہے کہ بلدیاتی نمائندے کسی انتخابی مہم میں حصہ نہیں لے سکتے جبکہ انتخابی مہم پولنگ کے روز سے 48 گھنٹے قبل ختم ہو جائے گی۔ ضلعی انتظامیہ سے انتخابی ریلی کی اجازت لینا لازم ہے اور کار ریلی پر مکمل پابندی عائد ہو گی۔اسی طرح افواج پاکستان اور اعلی عدلیہ کے خلاف ہرزہ سرائی کرنے پر بھی پابندی عائد ہوگی۔

ضابطہ اخلاق میں بتایا گیا ہے کہ اخراجات کے حوالے سے موجود شق کے مطابق کسی بھی امیدوار کے انتخابی اخراجات مقررہ کردہ حد سے زیادہ نہیں ہونے چاہئیں۔ انتخابی مہم میں اشتہارات کا سائز مقرر کردہ حد سے زیادہ نہ ہو۔الیکشن کمیشن کا مزید کہنا ہے کہ ڈسٹرکٹ ریٹرننگ افسر، ریٹرنگ افسر، پولیس اور ضلعی انتظامیہ کے ساتھ مل کر ضابطہ اخلاق پرعمل درآمد یقینی بنائیں گے۔

یہ بھی پڑھیے

ضمنی الیکشن میں سمندر پار پاکستانیوں کو ووٹ کا حق دے دیا، الیکشن کمیشن

چیف الیکشن کمیشن کی زیرصدارت اہم اجلاس، صدارتی انتخابات کی تیاریوں پر بریفنگ

 

Spread the love

Comments are closed.

Scroll To Top