تازہ ترین
اسپیکر قومی اسمبلی نے شہبازشریف کے پروڈکشن آرڈر جاری کردیئے

اسپیکر قومی اسمبلی نے شہبازشریف کے پروڈکشن آرڈر جاری کردیئے

اسلام آباد: (10 اکتوبر 2018) اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر نے قائد حزب اختلاف شہباز شریف کے پروڈکشن آرڈرز جاری کردیئے ہیں۔ نیب لاہور کو سترہ اکتوبر کے اسمبلی اجلاس میں شہبازشریف کی شرکت یقینی بنانے کی ہدایت کردی گئی ہے۔

قومی اسمبلی کے اسپیکر اسد قیصر نے قائد حزب اختلاف شہباز شریف کے پروڈکشن آرڈرز جاری کردیئے ہیں۔ فیصلہ قومی اسمبلی میں کارروائی اور طریقہ کار کے قواعد 2007ء کے قاعدہ 108 کے تحت کیا گیا ہے۔

قواعد کے تحت اسپیکر کسی بھی زیرحراست رکن اسمبلی کو اجلاس میں شرکت کیلئے طلب کرسکتا ہے۔

نیب لاہور کو 17 اکتوبر کے اسمبلی اجلاس میں شہبازشریف کی شرکت یقینی بنانے کی ہدایت کردی گئی ہے۔واضح رہے کہ اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر نے قومی اسمبلی کا اجلاس 17 اکتوبر کو طلب کیا ہے۔ مسلم لیگ (ن)  نے فوری اجلاس طلب کرنے کی ریکوزیشن جمع کرائی تھی جبکہ اسپیکر نےفوری اجلاس طلب کرنے کے بجائے 17 اکتوبر کو اجلاس بلایا ہے۔

یہ ویڈیو دیکھنے کیلئے پلے کا بٹن دبائیے

دوسری جانب ترجمان مسلم لیگ (ن) مریم اورنگزیب نے قومی اسمبلی کا اجلاس طلب کرنے کے باوجود اپنا احتجاج جاری رکھنے کا فیصلہ کیا ہے، اپنے بیان میں مریم اورنگزیب نے واضح کیا کہ پاکستان مسلم لیگ (ن) کل شیڈول کے مطابق پارلیمنٹ ہاؤس کے باہر احتجاجی اجلاس منعقد کرے گی،جس کی صدارت سابق اسپیکر قومی اسمبلی اجلاس کی صدارت کرینگے۔مریم اورنگزیب کا کہنا تھا کہ ہم نے قومی اسمبلی اجلاس جلد بلانے کی درخواست کی تھی مگراسپیکرنے اجلاس جلد بلانے کی درخواست منظورنہیں کی اس لئے قومی اسمبلی اجلاس بلانے کے باوجوداپوزیشن نے احتجاج جاری رکھنے کافیصلہ کیا ہے۔واضح رہے کہ گذشتہ روز سابق اسپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز صادق نے سینیٹ اور قومی اسمبلی کا علامتی اجلاس طلب پارلیمنٹ کے گیٹ نمبر ایک پر طلب کر رکھا ہے،جس میں مسلم لیگ (ن) کے مرکزی صدر شہباز شریف کی گرفتاری پر بحث کی جائے گی۔

ذرائع کے مطابق احتجاجی اجلاس قومی اسمبلی کے باہر سہ پہر تین بجے منعقد ہوگا جس کی صدارت سابق اسپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز صادق کریں گے،ذرائع کا کہنا ہے کہ احتجاجی اجلاس قومی اسمبلی کی سیڑھیوں پر منعقد ہوگا۔

پنجاب اسمبلی کے باہر احتجاجی کیمپ

دوسری جانب پنجاب اسمبلی میں قائد حزب اختلاف حمزہ شہباز شریف نے لیگی ارکان کو آج صبح پنجاب اسمبلی کے باہر احتجاجی کیمپ لگانے کی ہدایت کردی ہے۔قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف اور مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف کی گرفتاری کے خلاف ن لیگ حکومت کو ٹف ٹائم دینے کیلئے لیگی ارکان کوآج صبح پنجاب اسمبلی کے باہر احتجاجی کیمپ لگانے کی ہدایت کر دی ہے۔

پنجاب اسمبلی میں قائد حزب اختلاف حمزہ شہباز نے اراکین اسمبلی کا احتجاجی اجلاس آج تین بجے پنجاب اسمبلی کی سیڑھیوں پرطلب کیا ہے جس کی صدارت سابق اسپیکر پنجاب اسمبلی رانا محمد اقبال کریں گے۔

احتجاجی اجلاس میں لیگی ارکان اسمبلی کو حاضری یقینی بنانے کی ہدایت کی گئی ہے۔حمزہ شہباز کا کہنا تھا کہ شہباز شریف کی گرفتار سراسر انتقامی کارروائی ہے جس کے خلاف آواز اٹھائی جائے گی۔

ایاز صادق کا خورشید شاہ سے رابطہ

سابق اسپیکر ایاز صادق نے پیپلز پارٹی کے سینئر رہنما خورشید شاہ سے رابطہ کرکے انہیں پارلیمنٹ کے باہر بلائے گئے اجلاس میں شرکت کی دعوت دی ہے۔

دونوں رہنماؤں کے درمیان ٹیلی فون پر ملک کی سیاسی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔سابق اسپیکر نے خورشید شاہ سے کہا اپوزیشن لیڈر کی گرفتاری لمحہ فکریہ ہے،احتساب کے نام پر انتقامی کارروائیاں کی جارہی ہیں،ایسے میں اپوزیشن کو متحد ہوکر لائحہ عمل اپنانے کی ضرورت ہے۔

ن لیگی رہنما نے خورشید شاہ کو دعوت دی کہ پیپلز پارٹی مسلم لیگ ن کی جانب سے بلائے گئے اپوزیشن جماعتوں کے اجلاس میں شرکت کرے جس پر خورشید شاہ نے کہاکہ پارٹی قیادت سے مشاورت کرکے جواب دیں گے۔

یہ بھی پڑھیے

سلمان شہباز نے نیب لاہور میں بیان ریکارڈ کرادیا

شہباز شریف کی گرفتاری: لیگی ارکان کا پنجاب اسمبلی کے باہر شدید احتجاج

 

Comments are closed.

Scroll To Top