تازہ ترین
منرل واٹر بیچنے کا معاملہ، صوبائی حکومتوں کو ایک ہفتے میں رپورٹ پیش کرنے کا حکم

منرل واٹر بیچنے کا معاملہ، صوبائی حکومتوں کو ایک ہفتے میں رپورٹ پیش کرنے کا حکم

اسلام آباد:(11 اکتوبر 2018) منرل واٹر بیچنے کے معاملے پر سپریم کورٹ نے تمام صوبائی حکومتوں کو پانی کی قیمتئں تعین اور قانون سازی کرکے رپورٹ پیش کرنے کا حکم دے دیا۔

چیف جسٹس کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے منرل واٹر کمپنیوں کی جانب سے زیر زمین مفت پانی استعمال کرنے سے متعلق کیس کی سماعت کی۔ چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ نیسلے سمیت کوئی کمپنی پانی کے استعمال پر پیسے نہیں دے رہی، اربوں گیلن پانی لیا گیا اور لاکھوں روپے بھی نہیں دیئے گئے۔منرل واٹر کمپنی کے وکیل اعتزاز احسن نے کہا کہ زمین سے پانی نکالنے، صاف کرنے اور مارکیٹ کرنے پر اخراجات آتے ہیں۔ چیف جسٹس نے جواب دیا کہ ا یسا کرتے ہیں کمپنی کی ٹربائنیں بند کرا دیتے ہیں اور کمپنی سے کہتے ہیں نلکے کا پانی دے۔ منرل واٹر کمپنیوں نے زیر زمین پانی سوکھا دیا ہے، نلکوں میں پانی آنا بند ہوگیا ہے۔ لاہور میں زیر زمین پانی چار سو فٹ تک پہنچ گیا ہے۔

چیف جسٹس نے عوام سے اپیل کرتے ہوئے کہا کہ بوتلوں کا پانی پینا بند کر دیں اور نلکوں کا پانی پیئیں، جن لوگوں نے ہماری زمینوں کو بنجر کیا اور پیسے بھی نہیں دیتے ان کے پانی کا استعمال بند کریں۔ چیف جسٹس نے کہا کہ دیہاتوں میں آج بھی لوگ سادہ پانی پیتے ہیں یہ نکھرے شہریوں کے ہیں کہ وہ سادہ پانی نہیں پی سکتے۔انہوں نے ریمارکس دیے کہ  منرل واٹر کمپنیوں نے آج تک فراڈ کیا ہے، ایف بی آر سیلز ٹیکس کے معاملے میں ان کمپنیوں سے ملی ہوئی ہے۔ کوئی بڑا وکیل اس معاملے میں عدالتی معاون بننے کو تیار نہیں، جو بڑے وکیل آتے ہیں وہ کسی کمپنی کی نمائندگی کرتے ہیں وکیلوں کو پاکستان سے پیار ہے یا فیسوں سے۔چیف جسٹس نے مزید کہا کہ سب سے بہتر تو وہ بچی ہے جو کہتی ہے میرا نام تطہیر فاطمہ بنت پاکستان ہے۔ عدالت نے تمام صوبائی حکومتوں کو پانی کی قیمتوں کا تعین اور قانون سازی کر کے رپورٹ پیش کرنے کا حکم دے دیا۔

سماعت کے آخر میں چیف جسٹس نے وکیل اعتزاز احسن سے مخاطب ہوتے ہوئے کہا کہ اعتزاز صاحب آپ نے ملک کی خدمت کرنی ہے مجھے کسی سے عشق کا تجربہ نہیں ممکن ہے آپ کو تجربہ ہو۔ ملک کو معشوقہ سمجھ کر اس کا خیال کریں تو سب ٹھیک ہو جائے گا۔ کیس کی سماعت ایک ہفتے کے لیے ملتوی کر دی گئی۔

یہ بھی پڑھیے

سپریم جوڈیشنل کونسل نے جسٹس شوکت صدیقی کو عہدے سے ہٹانے کی سفارش کردی

این آر او کیس: زرداری، بینظیر کی جائیداد کی تفصیلات اور مشرف کی میڈیکل رپورٹ جمع

Comments are closed.

Scroll To Top