تازہ ترین
احتساب عدالت کا شہباز شریف کے داماد عمران علی کی جائیداد ضبط کرنے کا حکم

احتساب عدالت کا شہباز شریف کے داماد عمران علی کی جائیداد ضبط کرنے کا حکم

لاہور: (11 اکتوبر 2018) مسائل کے بھنور میں پھنسی شریف فیملی کی مصیبت میں ایک اور اضافہ ہوگیا۔ لاہور کی احتساب عدالت نے شہباز شریف کے داماد کی جائیداد ضبط کرنے کا حکم دے دیا۔ نیب نے عمران علی ملک کے خلاف درخواست دائر کی تھی۔

احتساب عدالت لاہور کے جج محمد اعظم  نے شہباز شریف کے داماد کے خلاف نیب کی درخواست منظور کرتے ہوئے عمران علی کی جائیداد ضبط کرنے کا حکم دیا ہے۔ عدالت نے حکم دیا کہ عمران علی کی صرف وہ جائیداد ضبط کی جائے جو ان کی ذاتی ملکیت ہے، دیگر شیئر ہولڈرز کی جائیداد پر کارروائی نہ کی جائے۔

نیب پراسیکیوٹر حافظ اسد اللہ نے عدالت کو آگاہ کیا کہ عمران علی کی اربوں روپے کی جائیداد پاکستان میں ہے۔ علی سینٹر اور علی ٹاور میں کروڑوں مالیت کے دفاتر اور اپارٹمنٹ جبکہ علی اینڈ فاطمہ ڈویلپر اور علی اینڈ کمپنی بھی ملکیت ہیں۔پراسیکیوٹر نے بتایا کہ ملزم کے نام پر مدینہ فیڈ ملز اور غوث اعظم ڈویلپرز بھی موجود ہیں جبکہ علی پروسیڈ فوڈز کمپنی کے علاوہ گلبرگ تھری میں پلاٹ عمران علی کی ملکیت ہیں۔

نیب کے مطابق عمران علی یوسف پر پنجاب پاور ڈویلپمنٹ کمپنی کے سی ایف او اکرام نوید سے 131 ملین روپے رشوت لینے کا الزام ہے۔ انہیں تحقیقات کیلئے طلب کیا تھا مگر وہ پیش نہیں ہوئے۔

شہباز شریف کے داماد کے وارنِٹ گرفتاری جاری ہوئے تاہم وہ بیرون ملک فرار ہوگئے۔

یہ بھی پڑھیے

حکمرانوں نے پنجاب اسمبلی کو نہیں جمہوری نظام کو تالا لگایا، حمزہ شہباز

اسپیکر قومی اسمبلی نے شہبازشریف کے پروڈکشن آرڈر جاری کردیئے

 

Spread the love

Comments are closed.

Scroll To Top